1. محترم مہمان السلام علیکم! فروغ نعت فورم میں سوشل شیئر کا آپشن شامل کیا گیا ہے۔ جب آپ کوئی نیا موضوع شروع کرتے ہیں تو موضوع کے شروع ہو جانے پر موضوع کے اوپر یہ آپشن ظاہر ہوتا ہے اس آپش پر کلک کرنے سے مختلف سوشل نیٹ ورکس کے آئکان ظاہر ہوتے ہیں آپ اپنی پسند کے نیٹ ورک پر اسے شائع کر سکتے ہیں۔میری دوستوں سے درخواست ہے کہ جب بھی کوئی کلام فورم میں شامل کریں تو سوشل شیئر بٹن کے ذریعہ اس کو فیس بک ، ٹویٹر اور گوگل پلس وغیرہ پر بھی شیئر کر دیا کریں اور اگر ممکن ہو تو جس کا کلام ہو اس کی فیس بک وال پر بھی شیئر کیا کریں تاکہ فورم کی ٹریفک میں اضافہ ہو اور لوگوں کی آمد و رفت رہے۔ جوکہ اس فورم کی مقبولیت کے لیے بہت ضروری ہے۔

مناقب اولیا سچائی (بچوں کے لیے ایک نظم) واقعہِ شیخ عبد القادر جیلانی رحمۃ اللہ علیہ از مظؔفر وارثی

'مناقب اولیا' میں موضوعات آغاز کردہ از ابوالمیزاب اویس, ‏جولائی 12, 2017۔

  1. ابوالمیزاب اویس

    ابوالمیزاب اویس ــــ:ناظمِ فروغ نعت:ــــ رکن انتظامیہ رکن فروغ نعت

    پیغامات:
    829

    چلا ایک بچہ سفر پر چلا
    بہت دور کی رہ گزر پر چلا

    اسے راہ میں کچھ بسیرے ملے
    بسیرے میں ظالم لٹیرے ملے

    لٹیروں نے جامہ تلاشی بھی لی
    مگر اس کی جیبوں میں کوڑی نہ تھی

    انہوں نے کہا لڑکے تو ہی بتا
    ترے پاس پیسہ نہیں کوئی کیا

    وہ بولا رقم ہے چھپائی ہوئی
    ہے کرتے کے اندر سلائی ہوئی

    لٹیروں نے سن کر کہا خوب ہے
    یہ بچہ ہے یا کوئی مجذوب ہے

    وہ بولے رقم کا پتہ کیوں دیا
    ہمیں بھید اپنا بتا کیوں دیا

    تو بچے نے انکو دیا یہ جواب
    میں کیوں اپنا ایمان کرتا خراب

    مری ماں کی ہے یہ نصیحت مجھے
    نہیں جھوٹ کہنے کی عادت مجھے

    خدا بھی تو جھوٹوں سے نفرت کرے
    جو سچے ہیں ان سے محبت کرے

    عقیدہ مرا ڈول سکتا نہیں
    کبھی جھوٹ میں بول سکتا نہیں

    سنا یہ تو حیران ڈاکو ہوئے
    وہ بچے کے آگے دو زانو ہوئے

    ادب سے اسے پیار کرنے لگے
    صداقت کا اقرار کرنے لگے

    ڈکیتی سے توبہ لٹیروں نے کی
    اجالوں سے الفت اندھیروں نے کی

    مدد سچے لوگوں کی ہو غیب سے
    بچاتی ہے سچائی ہر عیب سے

    (مجموعہِ کلام : بابِ حرم)
    • زبردست زبردست x 1